طلباء وطالبات کا تقریری انعامی مقابلے کا انعقاد

ویشالی (صدر علم ندوی) ضلع ادو سیل کی جانب سے ضلع کلکٹر ویشالی کے کانفرنس ہال میں ڈی ایم ویشالی رچنا پاٹل کی موجودگی میں دسویں، بارہویں، اور بی اے کے طلباء وطالبات کا تقریری انعامی مقابلے کا انعقاد ہوا دسویں کے طلباء کا عنوان تھا تعلیم کی اہمیت، بارہویں کے لیے اردو زبان کی اہمیت، بی اے کے لئے غزل کی مقبولیت کے عناوین مقرر کیے گئے تھے. ضلع کے بیس مدارس و اسکولوں کے طلبا و طالبات  نے حصہ لیا. ہر درجہ سے آٹھ آٹھ طالب علموں کو اردو سیل کے ڈائریکٹر ظفر عالم کے ہاتھوں انعامات سے نوازا گیا.مولانا حسن رضا، مولانا نیاز قاسمی،  ڈاکٹر حامد علی خاں، ڈاکٹر مشتاق احمد مشتاق، اور ڈاکٹر مہ جبین خانم نے جج کے فرائض انجام دئیے.  اس پروگرام کی نظامت انوارالحسن وسطوی نے کی مولانا عبدالقیوم شمسی، ماسٹر عظیم الدین انصاری ماسٹر ذاکر،  کامران غنی صبا عارف حسن وسطوی، مولانا شمیم شمسی، مولانا قمر عالم ندوی، مولانا صدر عالم ندوی وغیرہ بھی پروگرام میں شریک ہوئے.  انعام پانے والوں کے نام اس طرح ہیں کلاس دسویں سے محمد آصف، محمد محی الدین. محمد توفیق، محمد فردوس،  محمد سیزان،  نیرہ خاتون،  سعود کیفی،  محمد کریم درجہ بارہویں سے رفعت پروین، محمد اشتیاق،  سمیہ فاطمہ،  محمد احتشام فریدی،  نکہت جبیں،  جوہی خاتون، صبیحہ خاتون،  محمد مہتاب،  درجہ بی اے سے گلنازشہزادی،  ثانیہ فرحت جہاں محمد شمشاد عالم، محمد نعیم الدین، فرحت جبین، ثنا پروین،  محمد فہیم اختر اور نکہت خانم کو انعامات سے نوازا گیا. نتائج کے اعلان سے قبل نوجوان شاعر کامران غنی صبا اور قیصر جمال نے سامعین کی فرمائش پر غزلیں بھی پیش کیں. ظفر عالم کے شکریہ کے ساتھ پروگرام کا اختتام ہوا. 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Social Media Auto Publish Powered By : XYZScripts.com