دل پر بیت رہی یا عوام پر 

کہیں نہ کہیںِ ،حالات ،واقعا ت گو اہی دیتے ہیں کہ حقیقت کیا ہے ، اب بے شک منہ دھو کر آ ئینہ دیکھیں ، صا حب تصو یر بد لنے وا لی نہیں ہے ، ویسے سیاست دان آ ج کل خو د سے ایسے ہم کلا م ہو تے ہو ں گے ،،، 
مر ے لبوں کا تبسم تو سب نے دیکھ لیا 
جو دل پر بیت رہی ہے وہ کو ئی کیا جا نے 
بات شروع ہی ہو ئی تو کہا وہ وعد ہ ہی کیا جو وفا ہو ، سامنے سے سادہ سے سا جو ا ب ملا ، وفاکر نے کی یہاں عا دت ، روایت ہی نہیں تو کیا دبا ؤ ڈالا جا ئے ، بلکل ٹھیک کہا گیا ہے ، زیادہ ما ضی میں نہیں جا تے ہیں ،مو جو دہ وا لے ، سند ھ والے جو پچھلی باری مو جو دہ وا لی نشست رکھتے تھے ، اور اپنی ذا ت میں با پ دادہ سے اپنے علا قوں میں ایم این اے تک مو جو د رہے ہیں ، یہ سب کیا بغیر وعد وں کے اس مقام تک پہنچتے آ ئے ہیں ، ہما ری عوام مچھلی کی طر ح جال دیکھ کر یا داشت کھو بیٹھتی ہے اور تو اور سبز با غ کے نظا رے کے بعد امید لگا ئے رکھتے ہیں کہ اب کی با ر بہتر ی ضر ور ہو گی ، پھر بہتری ہو تی ہے کیا ، اان دنوں جو ملک کی بھا گ دوڑ سنبھا لنے والے ان کے بیا ن ، گھپلے بہت ہیں کا روا ئی کہ گئی تووقت کا ضا ئع ہو گا اور تر قیا تی کا موں میں سستی آ جا ئے گی ، پہلی با ت ، تحقیقات وہی کر یں گے جو تر قیا تی کا م کر وا رہے ہیں ، کیا یہ ملک چھو تی سی ریا ست ہے جہاں تما م بڑے آ فیسر ملکی صو رت حال دیکھ کر دو تین جاب ایک سا تھ سر انجام دیتے ہیں ، اگر ایسا ہے تو اصل میں جو اتنے سر کا ری دفا تر موجو د ہیں وہ کیا چنے چبا رہے ہیں یا صر ف مر اعات کے مز ے لو ٹنے کے لیے بیٹھے ہیں ،بات تر قیا تی کا موں کی ، حکو مت کی ذمہ داری ہو تی ہے کہ وہ وقت کی ضر ورت مطا بق ملک میں تر قیا تی کا م ہو نے چا ہیے اور جو پیسہ ان پر لگتا ہے ، وہ پیسہ عام عوام کے ٹیکسوں سے اکٹھا ہو تا ہے ، جو تر قیا تی کا م کر تے ہیں ، پلا ننگ سے لے کر آ خری مر احلے تک ، اور جو ادارے چیک اینڈ بیلنس بر قرار رکھنے کے لیے ہو تے ان کی تنخو اہ بھی عوام کے پیسوں سے ادا ہو تی ہے ، اگر تحقیقات اور ساتھ تر قیا تی کا م کر وانے کے لیے آ فیسر وں کی کمی ہو گی ہے تو اس رپو رٹ پر نظر ڈا ل لیں جس میں وا ضع بتا یا جا تا کہ ملک میں پڑ ھے لکھے نو جوان جا ب تلا ش کر تے در در کی ٹھو کر یں کھا رہے ہیں ، آ پ کی کمی بھ ی پو ری ہو جا ئے گی اور ساتھ ان نو جو انوں کو جاب بھی مل جا ئے گی ، اور آ پ کو ایسے بیا نات دینے کی زحمت نہیں اٹھا نی پڑ ء ے گی جس پر عام عوام کچھ سو چنے پر مجبو ر ہو جیسے آ ج یہ را قم جسا رت کر رہا ہے ۔
اس طر ح کے حا لا ت میں زرداری صا حب فر ما رہے ہیں کہ اقتدار والے اپنے وعد ے پو رے نہیں کر سکے ہیں لہذا ان کے خلا ف اب کھل کو احتجا ج کیا جائے گا ، اور جو اس با ر وعد ے پو رے نہیں کر سکے وہ اگلی با ر الیکشن میں کا میا بی کے لیے کیا عوام کو کہیں گے ، یہ ارشا دات اس ہستی کے ہیں جن کی سیاسی چا لوں کو کو ئی ما ت نہیں دے سکا ، اور بہت ہ مشکل حا لا ت میں پا رٹی کا سنبھا لا اور سا تھ بڑے عہد ے پر بھی جم کر رہے ہیں ، جو کہا جا رہا ہے کہ وعد ے پو رے نہیں کیے تو آ گے کیا امید تو اس سوا ل کا جو اب حکو مت کو دینا چا ہیے ، اگر نہیں دیتے تو منفی تا ثر قا ئم ہو گیا اور زداری صا حب اسی کو کیش کر وائیں گے ،رہی بات عمران خاں صا حب کی تو وہ الیکشن میں پا نا مہ لیکس کو ساتھ لے کر چلیں گے مگر ساتھ ججز بھی ہیں تو فل پو ائنٹ نہیں مل سکتے ہیں مگر پی ٹی آ ئی والے اس حقیقت سے آ نکھیں بند کر رہے ہیں ، پا نا مہ لیکس کیس کی سیاسی پو ائنٹ سکو رنگی اپنی جگہ اگر ساتھ وہ صوبے میں حیر ت انگیز کا م کر تے تو عوام کی امید یں سو فیصد پو ری ہو جا تیں جو اس پا رٹی کے ساتھ عوام لگا کر بیٹھی ہے ، اور اس کے بد لے میں آ نے وا لے الیکشن میں عوام جو ش سے پی ٹی آ ئی کی جا نب آ تی ، اب آ ئے گی ، کہا جا تا عوام کے پا س اور کو ئی آ پشن نہیں ہے ، جو یہ سو چتے ہیں ان کے لیے بتا یا جا ئے کہ ہما رے سیاست دان ملک کے لیے تو نہیں مگر اپنی سیا ست کو قا ئم رکھنے کے لیے بہت لمبی سو چ اور پلا ننگ رکھتے ہیں ، مر یم اور بلا ول ، یہ کب کام آ ئیں گے ، یہ کب عوام کے جذبات کے ساتھ کب کھیلیں گے ،آ خر کا ر ان کو بھی تو مو قع ملنا چا ہیے ، اور یہ مو قع لے کر رہیں گے ، باتیں سا دہ سی ہیں مگر پھر بھی حقا ئق پر پر دے آ رام سے ڈال دیے جا تے ہیں ، وہاں سیا سی لو گ ایسی چا ل چلتے ہیں کہ عوام یا داشت کھو ئے جا تے ہیں ۔ اب کی بار کی طرح پھر ایک بار بھا ئی بھا ئی کہا جا ئے گا ،ایک مو قع ان کو ملے گا ،خاں صا حب پا رٹی میں استعمال لو گ شامل نہ کر تے ، انہی دنوں ایک دو اور سیاسی ورکر اس پا رٹی میں شا مل ہو ئے ہیں ، جو پہلے کسی اور سیاسی جما عت میں اقتدار کے مز ے لے چکے ہیں ، عمر ان خاں کی اب جو پو زیشن ہے ، کہے سکتے ہیں کہ جس کو خدا پا ک عز ت دے ، مگر پھر بھی عزت بر قرار خو د سے رکھنی ہو تی ہے ، جا نتے ہیں ن لیگ والے اور پیپلز پا رٹی وا لے بھی ہیں کہ انہوں نے کیا عوا م کو دیا مگر اب سیاسی کھیل سے وہ خو د کوبا ہر کیسے کر سکتے ہیں ، بس یہ عا د ت ہما ری قوم کو بہت مہنگی پڑرہی ہے اور نا جا نے اور کتنا عر صہ آگے یہ سلسلہ چلتا رہے گا ، کہیں نہ کہیںِ ،حالات ،واقعا ت گو اہی دیتے ہیں کہ حقیقت کیا ہے ، اب بے شک منہ دھو کر آ ئینہ دیکھیں ، صا حب تصو یر بد لنے وا لی نہیں ہے ، ویسے سیاست دان آ ج کل خو د سے ایسے ہم کلا م ہو تے ہو ں گے ،،، 
مر ے لبوں کا تبسم تو سب نے دیکھ لیا 
جو دل پر بیت رہی ہے وہ کو ئی کیا جا نے 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Social Media Auto Publish Powered By : XYZScripts.com