یہ مرا درد بے مثال ہے مجھ میں:

یہ مرا درد بے مثال ہے مجھ میں

یہ مری خوبی ہے کمال ہے مجھ میں

یہ مرا ظرف ہے تجھے نہیں معلوم

مرا دل ہی مرا زوال ہے مجھ میں

مرا جسم اتنا بوجھ کیوں ہو رہا ہے

کوئی تو ہےیہ جو نڈھال ہے مجھ میں

ترے غم روح پہ رقم ہو رہے ہیں

بس اسی بات کا ملال ہے مجھ میں

میں تری یاد میں بے چین ہوں ساگر

تری ہی ذات کا خیال ہے مجھ میں

Poet : Sagar Haider Abbasi

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Social Media Auto Publish Powered By : XYZScripts.com